پاک بھارت کرکٹ بحالی، فیصلہ مودی کریں گے، سابق کپتان کپل دیو

نئی دہلی: بھارتی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان کپل دیو کا کہنا ہے کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان دو طرفہ کرکٹ کی بحالی کا فیصلہ حکومت پر چھوڑ دیا ہے اس کا فیصلہ صرف دونوں حکومتیں ہی کرسکتی ہیں۔

ٹائمز آف انڈیا کو انٹرویو دیتے ہوئے کپل دیو نے کہا کہ پاکستان کے ساتھ جب دو طرفہ کرکٹ تعلقات کو دوبارہ شروع کرنے کی بات ہوتی ہے تو قومی مفاد سب سے زیادہ اہمیت کا حامل ہوتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان اور بھارت کے کرکٹرز ایک دوسرے کے ساتھ کرکٹ کھیلنا چاہتے ہیں لیکن دونوں ممالک کے درمیان تناؤ کی صورتحال کے باعث حکومتیں ہی کھیل کر فیصلہ کرسکتی ہیں۔ میرا خیال کیا ہے کہ یہ اہمیت کا حامل نہیں ہے البتہ حکومت کی کیا پالیسی یہ زیادہ اہم ہے۔

سابق بھارتی کپتان نے کہا کہ کھلاڑیوں اور شہریوں کو حکومت کے ساتھ کھڑا ہونا چاہیے۔

پاکستان اور بھارت کی ٹیموں نے سال 2012 کے بعد سے کوئی باہمی سیریز نہیں کھیلی البتہ آئی سی سی ایونٹس میں دونوں ٹیمیں ایک دوسرے کے مدمقابل آچکی ہیں۔

یاد رہے کہ بھارت نے 2008 میں ممبئی میں ہونے والے حملوں کے بعد پاکستان کے ساتھ دوطرفہ کرکٹ تعلقات منقطع کردیئے تھے۔

خیال رہے کہ پاکستان اور بھارت کی ٹیمیں رواں سال 23 اکتوبر کو آئی سی سی ٹی20 ورلڈکپ کے لیگ راؤنڈ میں ایک دوسرے کا سامنا کرینگی۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں