پاکستان اورجنوبی امریکی ریاستوں کے مابین دو طرفہ تجارت میں ریکارڈ اضافہ

پاکستان اورجنوبی امریکی ریاستوں کے مابین دوطرفہ تجارت کے حجم میں رواں مالی سال کے دوران گزشتہ مالی سال کے مقابلہ میں نمایاں اضافہ ریکارڈکیاگیاہے۔مالی سال کے پہلے 8 ماہ میں جنوبی امریکی ریاستوں کوپاکستان کی برآمدات میں 62.13 فیصد اور ان سے درآمدات میں 65.30 فیصداضافہ ریکارڈکیا گیا ہے۔

جاری کردہ اعدادوشمارکے مطابق رواں مالی سال کے پہلے 8 ماہ میں جنوبی امریکی ریاستوں بشمول ارجنٹائن، برازیل اوریوراگوئے کوپاکستانی برآمدات کاحجم 242.28 ملین ڈالرریکارڈکیاگیا جوگزشتہ مالی سال کی اسی مدت کے مقابلہ میں 62.13 فیصدزیادہ ہے۔ گزشتہ مالی سال کی اسی مدت میں جنوبی امریکی ریاستوں کو149.43 ملین ڈالرکی برآمدات ریکارڈکی گئی تھیں۔

فروری 2022 میں جنوبی امریکی ریاستوں کوبرآمدات کاحجم 28.12 ملین ڈالرریکارڈکیاگیا جوجنوری میں 34.46 فیصداورگزشتہ سال فروری میں 18.81 ملین ڈالرریکارڈکیاگیاتھا۔ مالی سال 2021 میں جنوبی امریکی ممالک کوپاکستان کی برآمدات کاحجم 256.93 ملین ڈالرریکارڈکیاگیاتھا۔

یاد رہے، فروری 2022 میں جنوبی امریکی ممالک  سے درآمدات کاحجم 65.26 ملین ڈالرریکارڈکیاگیا جوگزشتہ سال فروری میں 25.25 ملین ڈالرتھا۔ مالی سال 2021 میں جنوبی امریکا سے درآمدات کاحجم 897.66 ملین ڈالرریکارڈکیاگیاتھا۔

معاشی امور کے ماہرین کا کہنا ہے کہ جنوبی امریکی ریاستوں اور پاکستان کے مابین تجارتی حجم میں اضافہ خوش آئند ہے۔ جنوبی امریکی مارکیٹ ہمیشہ سے پاکستانی سرمایہ کاروں کے لیے پر کشش رہی ہے۔ اس میں بہتری کی گنجائش موجود ہے حکام بالا کی توجہ اس کو بہتر بنانے میں اپنا کردار ادا کرسکتی ہے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں